روسی صدر کو ’نفسیاتی‘ کہنے والی ماڈل کی لاش ایک سال بعد سوٹ کیس سے برآمد

روسی صدر ولادیمیر پیوٹن کو ’نفسیاتی‘ کہنے والی ماڈل کی لاش ایک سال بعد سوٹ کیس سے برآمد ہوگئی۔:News

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق 23 سالہ روسی ماڈل گریٹا ویڈلر نے گزشتہ برس جنوری میں سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو پوسٹ کی تھی جس میں اُنہوں نے صدر پیوٹن کو نفسیاتی قرار دیا تھا۔اس پوسٹ کے بعد، گریٹا ویڈلر ایک. سال تک لاپتہ رہیں اور اب ایک سوٹ کیس سے ماڈل کی لاش برآمد ہوئی ہے

خدا کی بستی: میں بتایا گیا کہ ماڈل کے قتل میں روسی صدر کا ہاتھ نہیں بلکہ ماڈل کے بوائے فرینڈ نے مالی تنازع کی بناء پر ماسکو میں اُنہیں گلا دبا کر قتل کیا اور ملزم نے اپنے جرم کا اعتراف بھی کرلیا ہے۔

ماڈل کے بوائے فرینڈ نے پولیس کو بتایا کہ وہ تین راتوں تک ہوٹل کے کمرے میں ماڈل کی لاش کے ساتھ سوئے جوکہ ایک نئے سوٹ کیس میں موجود تھی تاہم اس کے بعد، ملزم نے ایک سے زائد عرصے تک کار کی ڈگی میں لاش والے سوٹ کیس کو چُھپا کر رکھا۔

اس عرصے کے بعد ماڈل کے بوائے فرینڈ نے چالاکی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اُن کے سوشل میڈیا اکاؤنٹس پر مختلف پوسٹس کرتے رہے تاکہ یہ تاثر دیا جا سکے کہ ماڈل زندہ ہے۔ماڈل کی گمشدگی پر اُن کے دوست نے مقدمہ درج کروایا جس کے بعد تحقیقات شروع کی گئیں اور بالآخر کار کی ڈگی سے سوٹ کیس برآمد ہوا جس میں ماڈل کی لاش موجود تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.