بپی لہری نے کبھی پاکستان کا دورہ کیوں نہیں کیا؟

گزشتہ شب دارِ فانی سے کوچ کرنے والے بھارتی موسیقار و گلوکار بپی لہری نے اپنی زندگی میں خواہش کے باوجود کبھی پاکستان کا دورہ نہیں کیا تھا۔بپی لہری نے سال 2013 میں ایک انٹرویو دیا تھا جس میں انہوں نے اس حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ میرے والد، اپریش لہری بھی ایک عظیم موسیقار تھے، وہ مجھے پاکستان نہ جانے کا مشورہ دیتے تھے، اس لیے میں وہاں کبھی نہیں گیا، بلکہ ہمیشہ پاکستان پر دوسرے ممالک کو ترجیح دی۔‘انہوں نے کہا تھا کہ مہدی حسن سمیت متعدد پاکستانی فنکار ہمارے پاس آتے تھے، بھارت اپنی ثقافت کے لحاظ سے بہت اچھا ہے، ہماری روایت ہے کہ ہم ہر کسی کو خوش آمدید کہیں۔بپی لہری کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی نہیں ہونی چاہیے اور حکومتی سطح کی کوششیں نتیجہ خیز ہونی چاہئیں۔موسیقار کا کہنا تھا کہ میں سیاست میں شامل نہیں ہونا چاہتا، پاکستان میں میرے بہت سے دوست ہیں، میں کسی ملک یا اس کے لوگوں سے نفرت نہیں کرتا۔یہاں یہ بات قابلِ ذکر ہے کہ اس انٹرویو کے ایک برس بعد ہی یعنی 2014 میں بپی لہری نے بی جے پی میں شمولیت اختیار کی تھی، لیکن اُن کا سیاسی کیریئر مختصر تھا۔2014 میں ہی مودی کے اقتدار سنبھالنے کے بعد سے بھارت اور پاکستان کے دوستانہ تعلقات کشیدہ ہوگئے جس کے بعد دونوں ممالک کی فنکار برادری کو پابندیوں کا آج تک سامنا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.