میاں چنوں واقعے پر مولانا طارق جمیل کا مؤقف سامنے آگیا

مولانا طارق جمیل کا اپنے بیان میں کہنا تھا کہ میاں چنوں واقعہ اور سانحہ سیالکوٹ ظلم اور جہالت ہے، شریعت تو کہتی ہے کہ قاتل کو سزا عدالت دے گی، آپ نہیں۔

Religious Scholar Maulana Tariq Jameel's Position On Mian Channu Incident  Came To The Fore - IG News
میاں چنوں واقعے پر مولانا طارق جمیل کا مؤقف سامنے آگیا


میاں چنوں میں دو روز قبل ہجوم نے توہین مذہب کاالزام لگاکرایک شخص کو قتل کر دیا تھا جس کے بعد 33 نامزد اور 300 نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا تھا۔مقدمہ ایس ایچ او تھانہ تلمبہ کی مدعیت میں درج کیا گیا ہےجس میں قتل اور دہشتگردی کی دفعات شامل ہیں ۔
خانیوال کے علاقے میاں چنوں میں توہینِ مذہب کے الزام میں ہجوم کے ہاتھوں قتل ہونے والے ذہنی معذور شخص مشتاق کے بھائی کا کہنا ہےکہ ان کا بھائی16،17 سال سے ذہنی طور پر مفلوج تھا اور ملتان کے ایک ڈاکٹر سے اس کا علاج ہو رہا تھا۔مقتول مشتاق احمد کے بھائی رانا ذوالفقار کا کہنا تھا کہ ان کے بھائی کو رسیوں سے باندھ کر تشدد کیا گیا، اس کے ہاتھوں کی انگلیاں کاٹی گئیں، اس کے مرنے کے بعد بھی لاش کو مارتے رہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.